رانا فقیر حسین نے جیل سے باہر آنے سے انکار کرتے ہوئے کہا ہے کہ انھیں خدشہ ہے کہ خفیہ ایجنسیوں کے اہلکار انھیں مار دیں گے

رانا فقیر کے وکیل انعام الرحیم نے بی بی سی کو بتایا کہ ان کے موکل نے جیل سے باہر آنے سے انکار کردیا ہے کیونکہ انھیں خدشہ ہے کہ جیل سے باہر آنے کے بعد خفیہ اداروں کے اہلکار انھیں اٹھا کر لے جائیں گے اور مار دیں گے۔

رانا فقیر کے وکیل نے اپنے موکل کی حفاظت کے لیے راولپنڈی کی انتظامیہ کو درخواست دی ہے تاہم ضلعی انتظامیہ کی طرف سے اس درخواست پر کوئی ردعمل سامنے نہیں آیا۔

پرویز مشرف حملہ کیس میں اب صرف ایک ملزم گرفتار ہے جس کا نام رانا نوید ہے اور وہ رانا فقیر کا بیٹا ہے۔

فوجی عدالت نے اس مقدمے میں رانا نوید کو پہلے عمر قید کی سزا سنائی تھی جسے بعدازاں سزائے موت میں تبدیل کردیا تھا تاہم سپریم کورٹ نے فوجی عدالت کے فیصلے کو کالعدم قرار دیتے ہوئے رانا نوید کی عمر قید کی سزا کو برقرار رکھا تھا۔

http://www.bbc.co.uk/urdu/pakistan/2013/09/130918_musharraf_attack_case_rwa.shtml

Post your comment

Your name:


Your comment:


Confirm:



* Please keep your comments clean. Max 400 chars.

Comments

Be the first to comment